برطانیہ میں نوجوان لڑکی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے والا بنگلہ دیشی شہری پولیس کی حراست میں۔

2017 ,مئی 22



لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ میں ایک شخص نے نوجوان لڑکی پر رات کے اندھیرے میں جنسی حملہ کر دیا لیکن اس لڑکی نے اچانک ایک ایساکام کیا کہ حملہ آور بعدازاں لڑکی کی اسی حاضر دماغی کی وجہ سے گرفتار کر لیا گیا۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق برطانوی شہر ریمزگیٹ کی 18سالہ طالبہ للیان کونسٹنٹین رات گئے گھر جا رہی تھی کہ اس کے گھر کے قریب ہی تاریک سڑک پر ایک بنگلہ دیشی شخص نے اس پر حملہ کر دیا اور اسے زیادتی کا نشانہ بنانے کی کوشش کی۔
للیان نے ہاتھ میں موبائل فون پکڑ رکھا تھا جس کی روشنی میں وہ گھر جا رہی تھی۔ جونہی حملہ ہوا اس نے فون کا کیمرہ آن کر دیا اورمزاحمت کرنے کے ساتھ ساتھ حملہ آور کی ویڈیو بنانے لگی۔ وہ چلا کر ملزم کو کہہ رہی تھی کہ میں تمہاری ویڈیو بنا رہی ہوں، تم بچ نہیں سکو گے۔ جب ملزم نے یہ سنا تو وہاں سے فرار ہو گیا۔ للیان نے یہ ویڈیو پولیس کو دے دی جس نے اس میں سے حملہ آور 34سالہ اشرف میاہ کی شناخت کرکے اسے گرفتار کر لیا اور عدالت میں پیش کر دیا جہاں سے اسے ساڑھے 13سال قید اور بعدازاں ملک بدری کی سزا سنا دی گئی ہے۔ واضح رہے کہ اشرف میاہ برطانیہ میں غیرقانونی طور پر مقیم تھا۔

متعلقہ خبریں