امریکہ میں قائم طلاق ہوٹل

2016 ,دسمبر 20



 

نیویارک (شفق ڈیسک) مہنگے اور پرآسائش ہوٹلوں کا استعمال لوگ عموماً سیر و سیاحت کے دوران تفریحی مقاصد کیلئے کرتے ہیں مگر امریکہ میں ایک ایسا منفرد ہوٹل قائم کردیا گیا ہے جہاں شادی شدہ جوڑے صرف طلاق کیلئے جاتے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق طلاق ہوٹل کے نام سے قائم کئے گئے اس خصوصی ہوٹل کارخ وہ جوڑے کرتے ہیں جو اپنی راہیں جدا کرنے کا فیصلہ کرچکے ہوتے ہیں۔ وہ یہاں آتے ہیں تو میاں بیوی ہوتے ہیں لیکن جب جاتے ہیں تو ایک دوسرے کیلئے اجنبی بن چکے ہوتے ہیں۔ ہوٹل انتظامیہ کا کہنا ہے کہ یہ پراجیکٹ بہت سوچ بچار کے بعد شروع کیا گیا۔ ہوٹل کے منیجر نے بتایا کہ اکثر جوڑوں کیلئے طلاق زندگی کا تلخ ترین تجربہ ثابت ہوتا ہے جسکے دوران کئی طرح کے جھگڑے اور کشیدگی پیدا ہوجاتی ہے۔ اس ہوٹل کا مقصد طلاق کے خواہاں میاں بیوی کو ایک ایسی جگہ فراہم کرنا ہے کہ جو دونوں کیلئے غیر جانبدار ہو اور جہاں وہ ہر قسم کے دباؤ سے آزاد ہو کر اس اہم معاملے کو پرسکون انداز میں نمٹام سکیں۔ ہوٹل میں ثالث اور وکیل کی سہولت بھی دستیاب ہے جو یہاں آنیوالے جوڑوں کو اپنی ماہرانہ خدمات فراہم کرتے ہیں اور عموماً دو دن میں ہی خوش اسلوبی سے طلاق کروا دیتے ہیں۔ ہوٹل میں قیام کرنیوالے جوڑے کو قانونی مشاورت فراہم کی جاتی ہے اور مشترکہ جائیداد اور اثاثوں کی تقسیم کا مسئلہ بھی حل کروایا جاتا ہے۔ ہوٹل انتظامیہ طلاق کے نتیجے میں پیدا ہونیوالی کسی بھی افسوسناک، غیرمتوقع یا غمناک صورتحال کا مقابلہ کرنے کیلئے بھی ہر ضروری مدد اور سہارا فراہم کرتی ہے۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ یہ ہوٹل غیر متوقع حد تک مقبول ہورہا ہے۔ اس کی ایک شاخ نیدر لینڈز میں پہلے ہی کام کررہی ہے دوسری شاخ نیویارک میں کھولی گئی ہے جبکہ مزید ایک شاخ لاس اینجلس میں کھولنے کی تیاری کی جا رہی ہے۔

متعلقہ خبریں