بھارتی ڈاکٹروں نے وزنی مصری خاتون کے علاج سے ہاتھ جھاڑ لئے

2017 ,اپریل 26



ممبئی (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں سمارٹ ہونے کیلئے آنیوالی دنیا کی سب سے وزنی مصری خاتون ایمان احمد کے لواحقین کا بھارتی ڈاکٹروں سے جھگڑا ہو گیا ہسپتال انتظامیہ نے علاج مکمل قرار دیکر ایمان سے جان چھڑا لی اور ڈسچارج کر کے واپس اپنے وطن چلنے جانے کیلئے کہہ دیا ایمان کو توقع ہے کہ آج علی الصبح واپس مصر بھجوا دیا جائیگا۔ ایمان کا ممبئی کے صیفی ہسپتال میں علاج جاری ہے اور اب تک 2 کروڑ روپے خرچ ہو چکے۔ سینئر ڈاکٹر مفضل لکڑا والا نے بتایا کہ علاج کے باعث اب ایمان احمد کا وزن 500 کلو سے کم ہو کر 178 کلو پر آچکا ہے۔ ایمان کی بہن صائمہ سلیم نے الزام لگایا کہ ڈاکٹر مفضل جھوٹا ہے،وہ نہ بول سکتی ہے نا کھا پی سکتی ہے۔بھارتی ڈاکٹروں نے بھاری مقدار میں ادویات استعمال کر کے اس کے دماغ کو مفلوج کر دیا ہے وہ نہ بول سکتی ہے نا کھا پی سکتی ہے جبکہ ایمان کے وزن میں بھی کوئی خاطر خواہ کمی نہیں آئی۔ 

 

متعلقہ خبریں