انسانی کھوپڑیاں کیا چیز تیار ہوتی ہے جان کر دنگ رہ جائیں

2016 ,دسمبر 1



 

غزہ (شفق ڈیسک) فلسطین کے مغربی کنارے سے اسرائیلی بربریت کی خبریں تو آتی رہتی تھیں لیکن اب ایسی ہولناک خبر آ گئی کہ ہر سننے والا لرز جائیگا۔ گلف نیوز کی رپورٹ کیمطابق فلسطین کی سکیورٹی فورس پی پی ایس نے ایک سمگلنگ گروہ کے کچھ ملزمان کو گرفتار کیا ہے جو قبروں سے میتیں نکال کر ان کی کھوپڑیاں حاصل کرتے اور انہیں منشیات بنانے والے گینگز کے ہاتھ فروخت کر تے تھے۔ رپورٹ کیمطابق یہ گینگز ان انسانی کھوپڑیوں سے ’’ہیروئن‘‘ بناتے ہیں۔ سمگلروں کو دو شہروں جریکو اور ہیبرون سے گرفتار کیا گیا ہے۔ رپورٹ کیمطابق پی پی ایس کیطرف سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ ’’انسانی کھوپڑیاں سمگل کرنیوالے اس گروپ کے متعلق مخبری ملنے پر چھاپہ مارا گیا جس میں ایک ملزم گرفتار ہوا۔ بعدازاں اس کی نشاندہی پر مزید دو ملزموں کو حراست میں لیا گیا۔ ان میں 20 سے 35 سال کی عمر کے تینوں ملزمان سے 7 انسانی کھوپڑیاں بھی برآمد ہوئیں۔ دوران تفتیش انہوں نے اعتراف کیا کہ وہ یہ کھوپڑیاں دیگر گینگز کو فروخت کرتے تھے جو ان سے ہیروئن بناتے ہیں۔ پی پی ایس کے ایک سینئر عہدیدار نے گلف نیوز کو بتایا کہ دوران تفتیش ان ملزمان نے انکشاف کیا کہ وہ ایک کھوپڑی 15 ہزار مثقال (تقریباً 4 لاکھ روپے) میں فروخت کرتے۔ کھوپڑی جتنی زیادہ پرانی ہوتی ہے اس کی اتنی زیادہ قیمت ملتی ہے۔ ہم نے اسرائیلی سکیورٹی حکام سے بھی رابطہ کر لیا تاکہ اس گروہ کے جو ملزمان اسرائیل کے زیرقبضہ علاقے میں چھپے ہوں انہیں بھی گرفتار کیا جا سکے۔

متعلقہ خبریں