جنرل ضیا الدین بٹ پر کیا گزری،وہ کس حال میں ہیں۔۔۔۔مشرف کے چاہنے والے پڑھ کر دل نہ جلائیں

2016 ,اکتوبر 18



 

 

انٹرویو،فضل حسین اعوان ۔سید بدر سعید
جنرل ضیاءالدین بٹ پاک فوج کے ایسے سربراہ تھے جنہیں آرمی چیف بننے کے فوراً بعد قید کر لیا گیا۔ انہوں نے 660 دن قیدِ تنہائی میں گزارے، چند لمحوں کے لئے بننے والے آرمی چیف کو جب رینک لگائے گئے تو بیج تک میسر نہ تھے۔ اس موقع پر ایک بریگیڈیئر کے بیج اتار کر ”سٹار“ پورے کئے گئے اور کامن پن سے ٹانگے گئے۔ جنرل ضیاءالدین بٹ موجودہ وزیراعظم نوازشریف کے گزشتہ دور حکومت میں ہونے والی فوجی بغاوت کے اہم کردار ہیں۔ یہ بات بھی کئی لوگوں کے لئے حیرت کا باعث ہو کہ جب جنرل پرویز مشرف کے حامی فوجیوں نے وزیراعظم ہا¶س پر چڑھائی کی تو اس وقت کسی اور نے نہیں بلکہ خود جنرل پرویز مشرف کی جگہ بنائے گئے نئے آرمی چیف جنرل ضیاءالدین بٹ نے ہی وزیراعظم ہا¶س کے محافظ کمانڈوز کو غیر مسلح کیا تھا