بالی ووڈ اداکارہ کو ہدایتکار نے رات گزانے کی پیشکش کر دی

2016 ,دسمبر 13



ممبئی (شفق ڈیسک) ہندو مذہب چھوڑنے والی اداکارہ سروین چاؤلہ نے کہا کہ فلم میں کام دلانے پر ہدایتکار کیساتھ رات گزارنیکی پیشکش ہوئی تھی۔ بالی ووڈ کی چکا چوند دنیا میں قدم رکھنا ہر کسی کا خواب ہے اور اس چمکتی دمکتی دنیا میں جانے کیلئے جہاں فنکارانہ صلاحیتیں چاہیے ہوتی ہیں وہیں فلم نگری میں قسمت آزمائی کرنیوالے اداکاروں اور خاص طور پر اداکاراؤں کو بہت تلخ تجربات کا سامنا کرنا پڑتا ہے اسی لئے ہندو مذہب چھوڑنیوالی اداکارہ سروین چاؤلہ نے فلم نگری میں کام ملنے کیلئے درپردہ کیا کچھ کرنا پڑتا ہے ان رازوں سے پہلی بار پردہ اٹھایا ہے۔ اپنے انٹرویو میں سروین چاؤلہ کا کہنا تھا کہ فلمی دنیا میں قدم رکھنے کے بعد بڑی فلم میں کام کرنے کی پیش کش ہوئی جس کیلئے میں نے حامی بھرلی تھی لیکن ہدایتکار کے دوست نے فون کرکے فلم میں کام دینے کے بدلے ساتھ رات گزارنے کا کہا اور ساتھ ساتھ فلم کی مکمل شوٹنگ تک ہدایتکار کیساتھ سونے کی شرط بھی رکھی تھی تاہم میں نے ان کی پیشکش کو فوری طور پر ٹھکرا دیا جسکے جواب میں مجھے فلم اور جس گھر میں رہائش پذیر تھی وہاں سے آدھی رات کو بے دخل کردیا گیا۔

متعلقہ خبریں