برقع اور حجاب اتروانے پر استعفیٰ

2016 ,دسمبر 10



ممبئی  (شفق ڈیسک) بھارت میں مسلم خاتون سکول ٹیچر نے برقع اور حجاب اتروانے پر استعفیٰ دے دیا۔ سکول ٹیچر شبینہ نازنین کا کہنا ہے کہ ہیڈ مسٹریس کی جانب سے انہیں مسلسل تنقید کا نشانہ بنایا گیا۔ بھارت میں مودی حکومت کے دوران انتہاء پسندوں کے بعد اداروں کے ذمہ داران بھی بے لگام ہو گئے ہیں۔ بھارتی سکولوں میں بھی مسلمانوں کیساتھ امتیازی سلوک کا آغاز ہو گیا ہے۔ بھارتی میڈیا کیمطابق ممبئی کے سکول کی ہیڈ مسٹریس نے اسمبلی میں مسلم خاتون سے زبرستی برقع اور حجاب اتروا دیا جسکے بعد پچیس سال کی انگلش ٹیچر شبینہ نازنین نے ہیڈ مسٹریس کے رویئے سے دل برداشتہ ہوکر استعفی دے دیا۔ سکول انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ان کی درسگاہ میں حجاب کی اجازت ہے جبکہ سکول قانون کیمطابق حجاب اوڑنا اور ماں کو بچے کو دودھ پلانے کی اجازت ہے۔ ہیڈ مسٹریس کے رویئے سے متعلق تحقیقات کی جائیں گی۔

متعلقہ خبریں