میڈیا ٹیڈی مارشل کے تسلط میں

2023 ,جنوری 10



کبھی پاکستان میں مارشل لاءہوا کرتا تھا تو اخبارات کو کوئی بھی اقتدار والوں کے بارے میں دی گئی خبر کو کلیئر کرنا ہوتا تھا۔ بعض اوقات تیار کاپیاں مارشل لاءکے دفاتر جاتی تھیں اور جس خبر کو مارشل لاءحکومت اپنے خلاف سمجھتی اسے وہاں سے نکال دیا جاتا چونکہ اس کام میں وقت لگ جاتا اور اشاعت میں کم وقت بچتا تو اسی طرح اخبارات شائع ہو جاتے۔

یہ سول مارشل لاء نہیں تو اور کیا ہے؟۔۔۔۔۔سید عارف مصطفٰی -مکالمہ

آج کل کمپیوٹر کا تیز ترین دور ہے۔ مگر مارشل لائی ضابطے پرانے ہیں۔ میڈیا کو آج ٹیڈی مارشل کنٹرول کر رہا ہے۔ ٹیڈی مارشل کون ہے؟ وہی ہے جو بوٹ بڑے جوش و جذبے سے چمکاتا ہے اور ایسا کرتے کرتے خود کو بھی مارشل سمجھنے لگا۔ چھوٹا سا، ننھا سا ٹڈا اور ٹیڈی مارشل سمجھنے لگا۔ میڈیا پر تسلط ہے۔ اس کی دسترس میں ہے۔ میڈیا کو خریدا جاتا ہے۔ کہیں دباؤ ڈالا جاتا ہے۔ اخبارات کے ساتھ وہی پرانی روایت اور کلچر صحافیوں کو لفافوں میں بند کر کے دوروں میں ساتھ لے جانا۔ جیسے خود ٹڈا مارشل کبھی ڈگی میں بیٹھ کر بھی بوتل میں بند ہو کے مارشلائی علاقوں میں جاتے ہیں۔

متعلقہ خبریں