حویلیاں طیارہ حادثہ رپورٹ میں انتہائی حیران کن انکشاف

2017 ,جنوری 12



 

اسلام آباد (شفق ڈیسک) بلیک باکس کیمطابق جہاز نے لینڈنگ کی کوئی کوشش ہی نہیں کی تھی، سیکرٹری سول ایوی ایشن کی بریفنگ۔ سیکرٹری سول ایوی ایشن نے انکشاف کیا ہے کہ حویلیاں میں حادثے کا شکار ہونیوالے طیارے کا انجن ٹھیک تھا لیکن اس نے لینڈنگ کی کوشش نہیں کی جبکہ حادثے سے ایک ہفتے قبل وزیراعظم بھی اسی طیارے سے گوادر گئے تھے۔ سیکرٹری سول ایوی ایشن عرفان الہی نے سینیٹ کی قائمہ کمیٹی کو بریفنگ دیتے ہوئے حادثے سے متعلق بتایا کہ حویلیاں حادثے کے شکار طیارے کے بلیک باکس کی رپورٹ موصول ہو گئی ہے جسکے مطابق چترال سے ٹیک آف کرتے وقت طیارے کے دونوں انجن 100 فیصد ٹھیک تھے تاہم 4 بج کر 12 منٹ پر پائلٹ نے پہلی کال کی جس کے بعد 4 بجکر 17 منٹ پر پائلٹ نے آخری کال کی۔ سیکرٹری سول ایوی ایشن کیمطابق پہلی کال میں پائلٹ کی آواز بالکل پرسکون تھی لیکن 4 بج کر 17 منٹ پر طیارہ جنوب کی بجائے مشرق کی طرف مڑگیا۔ سیکرٹری سول ایوی ایشن نے بتایا کہ بلیک باکس کیمطابق جہاز نے لینڈنگ کی کوئی کوشش ہی نہیں کی تھی تاہم تحقیقات کی جارہی ہیں کہ ایک انجن ٹھیک ہونیکے باوجود جہاز حادثے کا شکار کیسے ہوا۔ انہوں نے انکشاف کیا کہ حویلیاں حادثے کا شکار ہونیوالے طیارے میں وزیراعظم نوازشریف حادثے سے ایک ہفتے قبل اسلام آباد سے گوادر گئے تھے۔ واضح رہے کہ 7 دسمبر کو چترال سے اسلام آباد جانیوالا طیارہ حویلیاں کے قریب حادثے کا شکار ہوگیا تھا جس کے نتیجے میں معروف مبلغ جنید جمشید اور ان کی اہلیہ سمیت 48 افراد جاں بحق ہوگئے تھے۔

متعلقہ خبریں